پاک فوج

محرم الحرام، پنجاب میں امن و امان برقرار رکھنے کیلئے فوج طلب

لاہور (پاک صحافت) محکمہ داخلہ پنجاب نے محرم الحرام میں امن و امان برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا اور عوام کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لیے پاک فوج کو طلب کر لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اس سلسلے میں محرم الحرام کے پہلے 10 دنوں میں پنجاب بھر میں دفعہ 144 نافذ کرتے ہوئے باضابطہ نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔ نوٹیفکیشن میں مذہبی تقریبات کے دوران سیکیورٹی کو برقرار رکھنے کے لیے کئی دیگر پابندیوں کا خاکہ پیش کیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے ماطبق ان اقدامات میں جلوس نکالنے، اجتماعات اور کسی بھی ایسی سرگرمی پر پابندی شامل ہے جو امن عامہ میں ممکنہ خلل کا باعث بنیں۔ مزید برآں جلوسوں کے دوران چھریوں، تلواروں اور لاٹھیوں کے استعمال پر بھی سختی سے پابندی لگا دی گئی ہے۔

مزید برآں، 9 اور 10 محرم کو مذہبی عزاداری کے دوران موٹرسائیکل سے متعلقہ واقعات سے منسلک خطرات کو کم کرنے کی کوشش میں ڈبل سواری پر پابندی کا نفاذ کیا گیا ہے۔ یہ اقدام سڑکوں پر لوگوں کی تعداد کو کم کرنے کی کوشش کرتا ہے، اس طرح حادثات کے امکانات کو کم کرنا اور عوامی تحفظ کو برقرار رکھنا ہے۔

خیال رہے کہ دفعہ 144 ایک قانونی شق ہے جو مقامی انتظامیہ کو یہ اختیار دیتی ہے کہ وہ پانچ یا اس سے زیادہ افراد کے جمع ہونے، عوامی جلوسوں اور مظاہروں پر پابندی عائد کرے تاکہ عوامی امن و سکون کو کسی بھی ممکنہ خطرے سے بچایا جا سکے۔ محرم کے تناظر میں دفعہ 144 کے نفاذ کا مقصد اس حساس دور میں کسی بھی ناخوشگوار واقعے کو روکنا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

پارلیمنٹ

صدارتی انتخاب کیلئے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 9 مارچ کو طلب

اسلام آباد (پاک صحافت) ملک میں نئے صدر کے انتخاب کے لیے پارلیمنٹ کا مشترکہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے