بھارتی ٹیم کی تاریخ کا سب سے کم ترین اسکور، آسٹریلین ٹیم نے 36 رنز پر ڈھیر کردیا

بھارتی ٹیم کی تاریخ کا سب سے کم ترین اسکور، آسٹریلین ٹیم نے 36 رنز پر ڈھیر کردیا

آسٹریلین باؤلرز کی تباہ کن باؤلگ کے سبب بھارتی ٹیم پہلے ٹیسٹ میچ میں تاریخ کے کم ترین اسکور 36 رنز پر ڈھیر ہو گئی ہے۔

بھارت نے میچ کی پہلی اننگز میں 244 رنز بنائے اور میچ کے دوسرے دن 15 وکٹیں گرنے کی وجہ سے آسٹریلین ٹیم بھی 191 رنز پر ڈھیر ہو گئی تھی۔

بھارت کی ٹیم نے پہلی اننگز میں 53 رنز کی برتری حاصل کی تھی جس کے بعد دوسرے دن کے اختتام پر مہمان ٹیم نے ایک وکٹ کے نقصان پر 9 رنز بنائے تھے۔

لیکن اس ڈے نائٹ ٹیسٹ میچ کا تیسرا دن بھارت کے لیے بھیانک خواب ثابت ہوا اور پوری ٹیم صرف 122 گیندوں پر محیط اس اننگز میں 36 رنز پر ڈھیر ہو گئی۔

بھارتی ٹیم کی تباہی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ کوئی بھی کھلاڑی ڈبل فیگر میں داخل نہ ہو سکا اور سب سے زیادہ 9رنز اوپنر ماینک اگروال نے بنائے، 36 رنز بھارت کا ٹیسٹ کرکٹ میں سب سے کم اسکور ہے جہاں اس سے قبل ان کا سب سے کم اسکور 42 رنز تھا جب وہ 1974 میں انگلینڈ کی تباہ کاری کا نشانہ بنے تھے۔

بھارت کی جانب سے پرتھوی شا 4، ماینک اگروال 9، جسپریت بمراہ 2، چتیشور پجارا صفر، کپتان ویرات کوہلی 4، اجنکیا راہانے صفر، ہنوما ویہاڑی 8، ، وردھیمان ساہا 4، روی چندرن ایشون صفر جبکہ محمد شامی ریٹائرڈ ہرٹ ہو کر پویلین لوٹ گئے۔

آسٹریلیا کی جانب سے جوز ہیزل وُڈ اور پیٹ کمنز کی جوڑی نے تباہ کن باؤلنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے بالترتیب 5 اور 4 وکٹیں حاصل کیں۔

ہیزل وڈ نے 5 اوورز کے اسپیل میں 8 رنز دے کر 5 وکٹیں حاصل کیں جبکہ کمنز نے 21 رنز کے عوض 4 وکٹیں لیں، بھارتی ٹیم کا یہ اسکور ٹیسٹ کرکٹ کی تاریخ میں کسی بھی ٹیم کے کم ترین اسکورز میں سے ایک ہے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں