ٹرین حادثہ

ہزارہ ایکسپریس حادثے کی ابتدائی رپورٹ ریلوے ہیڈکواٹر کو موصول

راولپنڈی (پاک صحافت) ہزارہ ایکسپریس حادثے کی ابتدائی رپورٹ ریلوے ہیڈکواٹر کو موصول ہو گئی۔ ابتدائی رپورٹ کے مطابق حادثے کی جگہ لائن کو جوڑنے والی فش پلیٹس نہیں تھیں، ابتدائی رپورٹ میں 6 افسران کے درمیان اتفاق رائے نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق تین افسران کی رائے ہے کہ حادثے کی جگہ سے لائن کو جوڑنے والی فش پلیٹس مسنگ تھیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ انجینئرنگ اور مکینکل انجینئرنگ کے شعبے کی ذمے داری بھی بنتی ہے۔

واضح رہے کہ ٹوٹی پٹڑی کی جگہ لکڑی کا ٹکڑا لگایا گیا تھا، حادثے کے شکار انجن کے ویل بھی خراب تھے، تخریب کاری کو خارج از امکان قرار نہیں دیا جا سکتا۔ رپورٹ کے مطابق گریڈ 16 کے دوسرے 6 افسران نے اپنے تین افسروں کی رائے سے اتفاق نہیں کیا، ابتدائی رپورٹ پر گریڈ 16 کے 6 افسران کے دستخط ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

مراد علی شاہ

مراد علی شاہ تیسری بار وزیراعلیٰ سندھ منتخب

کراچی (پاک صحافت) پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے امیدوار سید مراد علی شاہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے