حجاب کے معاملے پر فرانس کو اقوام متحدہ کی پڑی پھٹکار

حجاب

پاک صحافت جنیوا میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کمیٹی نے حجاب کے معاملے میں امتیازی سلوک پر فرانس پر تنقید کی ہے۔

ایک ہائی اسکول میں بالغوں کے لیے تعلیمی پروگرام میں شرکت کرنے والی خاتون کو حجاب پہننے سے روکنے سے متعلق انسانی حقوق کمیٹی کے مطابق فرانس نے شہری اور سیاسی حقوق سے متعلق بین الاقوامی معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔

کمیٹی کا یہ فیصلہ مارچ کے مہینے میں لیا گیا تھا لیکن بدھ کو اس فیصلے سے درخواست گزار کے وکیل کو آگاہ کر دیا گیا۔ یہ فیصلہ 2016 کی ایک شکایت کے بعد سامنے آیا ہے جس میں 1977 میں پیدا ہونے والی ایک خاتون نے کہا تھا کہ 2010 میں ایک سکول میں بوڑھے لوگوں کے لیے ایک پروگرام منعقد کیا گیا تھا جس میں وہ حجاب پہننا چاہتی تھی اور پرنسپل نے اسے روک دیا۔

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کمیٹی نے کہا کہ درخواست گزار خاتون پر عائد پابندیاں سیاسی اور شہری آزادیوں کے بین الاقوامی کنونشن کی خلاف ورزی اور مذہبی آزادی پر حملہ ہے۔ درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ کمیٹی کا فیصلہ اہم ہے کیونکہ یہ اقلیتوں کے حقوق کے احترام کا معاملہ ہے۔

اقوام متحدہ کی کمیٹی کا یہ فیصلہ ان فرانسیسی حکام کے لیے منہ توڑ جواب ہے جو یہ کہتے رہتے ہیں کہ وہ مذہب کی علامتوں کے استعمال کی اجازت نہیں دے سکتے۔ فرانس میں کئی سالوں سے مسلمان خواتین اور لڑکیوں پر حجاب کا استعمال بند کرنے کے لیے زبردست دباؤ ہے۔ فرانس میں اسلام فوبیا کی لہر بھی حالیہ برسوں میں مسلسل بڑھ رہی ہے اور مسلمانوں پر حملوں میں تیزی آئی ہے۔ ایمانوئل میکرون کی حکومت میں مسلمانوں کے خلاف بہت سے قوانین بھی منظور کیے گئے، جس سے ان کی زندگیوں میں مشکلات پیدا ہوگئیں۔

حکومت فرانس فروری 2022 میں حکومت فرانس نے ایک تنظیم بنائی جس کا کام فرانسیسی معاشرے کے مطابق مسلمانوں کے طور طریقوں کو تبدیل کرنا ہے۔ یہ دراصل ملک میں اسلام پر ایک منصوبہ بند حملہ ہے۔ اسلام کے بارے میں میکرون کی سوچ بری ہے اور وہ اسلام کو نقصان پہنچانے والے کاموں میں ملوث رہے ہیں۔ اسلامی انسانی حقوق کمیشن کے سربراہ مسعود شجرے نے کہا کہ میکرون کھلم کھلا اسلام پر حملہ کر رہے ہیں اور اسلام کے لیے بحران پیدا کرنا چاہتے ہیں جب کہ حقیقت یہ ہے کہ فرانسیسی پالیسیاں اور یورپی سیاست دان خود شدید مشکلات کا شکار ہیں۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں