امریکہ

امریکہ سے ابھی تک نہیں ٹلا ٹرمپ اور ان کے حامیوں کا خطرہ

واشنگٹن {پاک صحافت} سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامیوں کے حملے کے خوف سے امریکی کانگریس کی عمارت میں نیشنل گارڈ تعینات کیا گیا ہے۔

کیپٹل ہل پر کانگریس کی عمارت کی حفاظت کے لیے دسیوں نیشنل گارڈز تعینات کیے گئے ہیں۔ امریکی وزیر دفاع نے اس خبر کی تصدیق کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ 6 جنوری 2021 کو واقعے کی حمایت میں ٹرمپ کے حامیوں کی ریلی کے پیش نظر کیپٹل ہل پر سیکورٹی بڑھا دی گئی ہے۔

پینٹاگون کے ترجمان کے مطابق نیشنل گارڈ کو دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی کے باہر بھی تعینات کیا جائے گا اور ضرورت پڑنے پر ان کی تعداد میں اضافہ کیا جا سکتا ہے۔ امریکی وزارت دفاع نے پہلے کہا کہ کانگریس کی پولیس نے پینٹاگون سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ واشنگٹن میں ٹرمپ کے حامیوں کی ریلی میں اپنی فوجیں ہمارے حوالے کرے۔

امریکی عہدیدار اس بات کو یقینی بنانا چاہتے ہیں کہ ٹرمپ کے حامیوں کی ہفتہ کی ریلی 6 جنوری 2021 کی تقریب کا اعادہ نہیں ہے۔ کیپٹل ہل کی حفاظت کے مقصد کے لیے انتہائی جدید قسم کے کیمرے لگائے گئے ہیں تاکہ پوری صورتحال پر نظر رکھی جا سکے۔

یاد رہے کہ امریکی صدارتی انتخابات میں ٹرمپ کی شکست کے بعد ٹرمپ کے حامیوں نے کانگریس کے سامنے دھرنا دیا اور کانگریس کی عمارت پر دھاوا بول دیا۔ اس واقعے میں کم از کم 6 افراد ہلاک ہوئے۔

یہ بھی پڑھیں

نیوزیلینڈ

نیوزی لینڈ نے اسرائیل کے جرائم سے منسلک حماس کے اثاثے منجمد کر دیے

پاک صحافت نیوزی لینڈ نے فلسطین کے خلاف مغربی پالیسیوں کے مطابق اور غزہ میں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے