کورونا وائرس کی روک تھام کے لیئے محققین نے اہم طریقہ کار بتا دیا

کورونا وائرس کی روک تھام کے لیئے محققین نے اہم طریقہ کار بتا دیا

اس وقت جب کورونا وائرس کی جان لیوا وبا دنیا بھر میں تباہی مچارہی ہے اور اختتام نظر نہیں آتا، تو اس کی روک تھام یا پھیلاؤ پر قابو پانے کے لیے نئے ذرائع کو جانچا جارہا ہے۔

اگرچہ بیشتر ماہرین اس بات سے متفق ہیں کہ ایک ویکسین ہی اس وبا کو روک سکتی ہے یا بتدریج اس کا پھیلاؤ روک سکتی ہے، مگر اس میں مہینوں لگ سکتے ہیں، اس کے نتیجے میں فیس ماسک، سماجی دوری اور اشیا کی صفائی جیسی احتیاطی تدابیر ہی باقی بچتی ہیں، مگر انسانی رویے انہیں زیادہ موثر نہیں ہونے دیتے۔

اب امریکا کے محققین نے ایک انقلابی پیشرفت کا دعویٰ کیا ہے جو نوول کورونا وائرس کی روک تھام کے ساتھ مستقبل کے وبائی امراض کی روک تھام کرسکے گا، نیو میکسیکو یونیورسٹی کے محققین کو اب تاریک سرنگ کے دہانے میں روشنی نظر آرہی ہے۔

جی ہاں واقعی اس تحقیق کی بنیادی دریافت روشنی کے حوالے سے ہی ہے، طبی جریدے جرنل اے سی ایس اپلایڈ میٹریلز اینڈ انٹرفیسز میں شائع تحقیق میں مخصوص پولیمرز اور اولگومرز کے امتزاج کو الٹراوائلٹ روشنی سے ملایا گیا تو کورونا وائرس کو مکمل طور پر ختم کرنے میں کامیابی ملی۔

اگرچہ بلیچ یا الکحل کو بھی وائرس کے خلاف موثر مانا جاتا ہے مگر ان سے اشیا کو صاف رکھنے کی مدت محدود ہوتی ہے، یو وی لائٹ کی نئی تیکنیک سے اشیا پر ایک کوٹنگ بنائی جاتی ہے جو وائرس کے اجتماع کو زیادہ وقت تک روکتا ہے، محققین کا کہنا تھا کہ یہ تیکنیک اینٹی وائرل خصوصیات رکھتی ہے۔

اس مقصد کے لیے اشیا پر روشنی ڈالنی ہوگی، جس کے بعد ان کی سطح روشنی کو جذب کرکے آکسیجن کو متحرک کرتی ہے جس سے ان پر موجود وائرس کے ذرات ختم ہونے لگتے ہیں۔

محققین کا کہنا تھا کہ یہ میٹریلز تاریکی میں نئے کورونا وائرس کے خلاف متحرک نہیں ہوتے بلکہ اس کے لیے الٹرا وائلٹ روشنی کی ضرورت ہوتی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ اس تیکنیک کو آسانی سے کمرشل، عام استعمال اور طبی اشیا جیسے وائپس، کپڑوں، طبی عملے کے حفاظتی ملبوسات کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس کا ایک منفرد فائدہ یہ ہے کہ اس سے کی جانے والی کوٹنگ پانی سے دھلتی نہیں اور زہریلے ذرات بھی سطح پر نہیں رہتے۔

اس حوالے سے ابھی مزید کام ہونا باقی ہے جس کے بعد اس میٹریل پر مبنی پراڈکٹس تیار کی جاسکیں گی جن کو کورونا کے ساتھ ساتھ فلو یا عام نزلہ زکام کے وائرسز کی روک تھام کے لیے بھی استعمال کیا جاسکے گا۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں