مصری صدر

جمہوریہ مصر کے صدر: ہم غزہ میں جنگ بندی کے لیے کام کر رہے ہیں

پاک صحافت ایک تقریر میں جمہوریہ مصر کے صدر نے غزہ کی پٹی میں جنگ بندی کے معاہدے تک پہنچنے کے لیے قاہرہ کی کوششوں کے تسلسل پر زور دیا۔

خبر رساں ادارے روئٹرز سے جمعے کے روز پاک صحافت کی رپورٹ کے مطابق مصری صدر عبدالفتاح السیسی نے اس بات پر زور دیا: “ہم غزہ میں جنگ بندی کے حصول اور اس علاقے میں انسانی امداد کے بہاؤ کو بڑھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔”

انہوں نے بیان کیا: ہم غزہ کی پٹی کے جنوب سے آنے والے پناہ گزینوں کو بھی اس پٹی کے شمال کی طرف جانے کی اجازت دینے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مصر کے صدر نے غزہ کی پٹی کے جنوب میں رفح پر صیہونی حکام کی طرف سے حملے کی دھمکیوں کے بارے میں بھی تاکید کی: ہم اسرائیل کے رفح پر حملے کے خطرے سے خبردار کر رہے ہیں۔

السیسی نے یاد دلایا کہ غزہ کی پٹی کا بنیادی ڈھانچہ تباہ ہو چکا ہے اس لیے غزہ کی تعمیر نو کے لیے درکار سال طویل ہوں گے اور مصر اس پٹی میں مزید امداد لانے کی کوشش کر رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا: غزہ میں جنگ چھٹے مہینے میں جاری ہے اور یہ ایک طویل عرصہ ہے۔ مصر غزہ کی پٹی پر حملوں کو روکنے کے لیے اپنی پوری قوت سے کوشش کر رہا ہے تاکہ ہم اس کی حفاظت کر سکیں اور غزہ کے لوگوں کو بچا سکیں۔

پاک صحافت کے مطابق فلسطینی مزاحمتی گروپوں نے 15 اکتوبر 2023 کو غزہ (جنوبی فلسطین) سے اسرائیلی حکومت کے ٹھکانوں کے خلاف “الاقصی طوفان” کے نام سے ایک حیران کن آپریشن شروع کیا جو 45 دن کے بعد بالآخر 3 دسمبر 1402 کو ختم ہوا۔ 24 نومبر 2023 کو اسرائیل اور حماس کے درمیان چار روزہ عارضی جنگ بندی یا حماس اور اسرائیل کے درمیان قیدیوں کے تبادلے کے لیے وقفہ ہوا۔

جنگ میں یہ وقفہ سات دن تک جاری رہا اور بالآخر 10 دسمبر 2023 بروز جمعہ کی صبح عارضی جنگ بندی ختم ہوئی اور اسرائیلی حکومت نے غزہ پر دوبارہ حملے شروع کر دیے۔ الاقصیٰ طوفان کے حیرت انگیز حملوں کا بدلہ لینے اور اس کی ناکامی کا ازالہ کرنے اور مزاحمتی کارروائیوں کو روکنے کے لیے اس حکومت نے غزہ کی پٹی کے تمام راستوں کو بند کر دیا ہے اور اس علاقے پر بمباری کر رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

اسرائیلی

اسرائیلی فوج کے ملٹری انٹیلی جنس ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ نے استعفیٰ دے دیا

پاک صحافت صیہونی ذرائع ابلاغ نے اطلاع دی ہے کہ 7 اکتوبر 2023 کو فلسطینی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے