غزہ

ایران نے غزہ جنگ کے خاتمے اور فلسطینیوں کے حقوق پر زور دیا

پاک صحافت اسلامی جمہوریہ ایران نے غزہ میں فوری جنگ بندی اور فلسطینیوں کو ان کے حقوق دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے اقوام متحدہ کی قراردادوں کی بنیاد پر فلسطینیوں کو ان کے حقوق فراہم کرنے کی بات کی ہے۔

ایران کے وزیر خارجہ نے جمعرات کے روز تہران میں ہنگری کے وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات میں کہا کہ تہران اس بات پر یقین رکھتا ہے کہ غزہ جنگ کا حل دنیا کے کسی دوسرے حصے میں مضمر نہیں ہے۔ انہوں نے امریکہ اور برطانیہ کی طرف سے جنگ کو یمن کی طرف گھسیٹنا ایک بڑی تزویراتی غلطی قرار دیا۔

عبداللہیان نے کہا کہ پیٹر سکیارٹو کے انٹرویو میں یہ بتایا گیا کہ ایران کس بنیاد پر فلسطین کی حمایت کرتا ہے۔ انہوں نے ہنگری کے وزیر خارجہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ غزہ کی جنگ کو فوری طور پر روکنے اور وہاں مستقل امن کے قیام کے لیے تمام امکانات کو بروئے کار لائیں۔

وزیر خارجہ عبداللہیان نے یوکرین جنگ کے حوالے سے اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف بے بنیاد الزامات کی سختی سے تردید کی۔ انہوں نے کہا کہ اس معاملے پر بے بنیاد دعووں کی تکرار نے اسے بور کر دیا ہے۔

اس ملاقات میں ہنگری کے وزیر خارجہ پیٹر سیارٹو نے غزہ جنگ کے جاری رہنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جن ممالک کا عالمی برادری میں کردار ہے انہیں غزہ کی پٹی میں جنگ بندی کے حصول کے لیے اپنے حقوق کا استعمال کرنا چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں

اسرائیلی

اسرائیلی فوج کے ملٹری انٹیلی جنس ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ نے استعفیٰ دے دیا

پاک صحافت صیہونی ذرائع ابلاغ نے اطلاع دی ہے کہ 7 اکتوبر 2023 کو فلسطینی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے