ٹرمپ

ٹرمپ کی مشکلات بڑھنے لگیں، دیکھیں آگے کیا ہوتا ہے؟

پاک صحافت وائٹ ہاؤس نے ٹرمپ انتظامیہ کو افغانستان سے امریکہ کے شرمناک انخلاء کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔

وائٹ ہاؤس نے اپنے تازہ فیصلے میں کہا ہے کہ افغانستان سے امریکہ کے شرمناک انخلا کی ذمہ دار ٹرمپ انتظامیہ ہے۔

جو بائیڈن کی حکومت نے افغانستان سے امریکہ کے انخلاء سے متعلق رپورٹ کا ایک مختصر حصہ شائع کیا ہے۔ اس رپورٹ میں سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو اس شرمناک واپسی کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے۔

اس کے ساتھ ہی رپورٹ میں ٹرمپ انتظامیہ پر امریکی فوجیوں کے انخلا کے لیے شرائط کو محدود کرنے کا بھی الزام لگایا گیا ہے۔ رپورٹ میں ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے جان بوجھ کر فورسز میں کمی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے جان کاربی کا کہنا ہے کہ ٹرمپ کے دور حکومت میں ایسی بہت سی چیزیں ہوئیں جیسے ہزاروں طالبان کی جیل سے آزادی، طالبان سے مذاکرات اور افغانستان میں اس سے پہلے۔ حکومت کے قیام کے بعد جنگ ختم کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

یاد رہے کہ 11 ستمبر کے واقعے کے بعد اس وقت کی امریکی حکومت نے 2001 میں افغانستان پر حملہ کیا تھا۔ اس کے بعد 20 سال تک امریکہ اور اس کی اتحادی فوجیں افغانستان میں موجود رہیں۔ بعد ازاں 2021 میں امریکی حکومت نے افغانستان سے اپنی فوجیں واپس بلانے کا فیصلہ کیا۔ امریکی فوجوں کے انخلاء کے بعد طالبان نے افغانستان کا کنٹرول سنبھال لیا۔

یہ بھی پڑھیں

نیوزیلینڈ

نیوزی لینڈ نے اسرائیل کے جرائم سے منسلک حماس کے اثاثے منجمد کر دیے

پاک صحافت نیوزی لینڈ نے فلسطین کے خلاف مغربی پالیسیوں کے مطابق اور غزہ میں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے