ترکی کو 10 بڑی معیشتوں تک پہونچا دوں گا: اردگان

اردگان

انقرہ {پاک صحافت} رجب طیب اردگان نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ جلد ہی ترکی کو دنیا کی 10 بڑی معیشتوں میں سے ایک بنائیں گے۔

ترکی کے صدر کا دعویٰ ہے کہ ان کے ملک کی معیشت ترقی کر رہی ہے۔

رجب طیب اردگان نے نئے سال کے پیغام میں وعدہ کیا ہے کہ ترکی نے معیشت کے لیے جو ہدف مقرر کیا ہے اس کی وجہ سے جلد ہی دنیا کی دس بڑی معیشت کا حصہ بن جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ جدید ترکی مضبوط جمہوریت اور ترقی کے معقول امکانات کی وجہ سے اپنے مستقبل کا خود فیصلہ کرے گا۔ اردگان نے کہا کہ ترکی کی معیشت کو ایک عرصے سے نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ترکی کی معیشت کو بے مثال مسائل کا سامنا ہے۔

ترکی کی قومی کرنسی لیرا کی غیر ملکی کرنسیوں بالخصوص امریکی ڈالر کی قدر میں کمی کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ حالیہ معاشی مسائل ترکی کی ترقی پذیر معیشت کے حقائق کے مطابق نہیں ہیں۔ اردگان نے کہا کہ ان کی حکومت نے معاشی بحران پر قابو پالیا ہے۔

ترکی کے صدر کا یہ دعویٰ ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب ترکی کی قومی کرنسی لیرا کی غیر ملکی کرنسیوں بالخصوص امریکی ڈالر کے مقابلے میں قدر میں کمی کا سلسلہ جاری ہے۔ ترکی میں اس وقت افراط زر کی شرح 21 فیصد سے زیادہ ہے۔

یہ معاملہ ترکی میں بدستور غم و غصے کا باعث بن رہا ہے۔ ترکی کی کرنسی کی قدر میں کمی اور اس ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی کی وجہ سے عوام میں بے اطمینانی ہے اور اسی وجہ سے رجب طیب اردگان کی مقبولیت میں بھی بہت تیزی سے کمی آئی ہے۔ گزشتہ تین ماہ میں ترک لیرا اپنی نصف سے زیادہ قدر کھو چکا ہے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں