وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس منعقد، کورونا وائرس سمیت متعدد مسائل پر گفتگو ہوئی

وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس منعقد، کورونا وائرس سمیت متعدد مسائل پر گفتگو ہوئی

وزیر اعظم عمران خان نے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں کہا ہے کہ کورونا وائرس پر کوئی سیاست نہیں ہونی چاہیے اور ہمارا صحت نظام وبا کے پھیلاؤ کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر وزیراعظم ہاؤس کی جانب سے جاری بیان کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جہاں وزرا نے بریفنگز دی۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کابینہ کو اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کے 47ویں اجلاس میں پاکستان کی نمائندگی کے حوالے سے آگاہ کیا۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان کی کوششوں سے تمام او آئی سی ممالک نے بھارت کے مقبوضہ کشمیر پر غیر قانونی تسلط کی مذمت کی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کے وژن کے مطابق عالمی سطح پر اسلاموفوبیا اور ناموس رسالتﷺ کی حساسیت کو اجاگر کیا گیا ہے جو ایک بڑی کامیابی ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اسلام ہمیں تمام مذاہب کی عزت اور احترام کی تلقین کرتا ہے، اسی طرح ہم دیگر مذاہب کے پیروکاروں سے بھی امید رکھتے ہیں کہ وہ دین اسلام اور نبی آخرالزمانﷺ کی ذات اقدس کے حوالے سے ادب و احترام کا مظاہرہ کریں اور اس بات کا احساس کریں کہ ان کے کسی فعل سے مسلمانوں کے مذہبی جذبات خصوصاً آنحضرتﷺ کی ذات کے حوالے سے کوئی بات یا فعل ہمارے لیے دلی اور روحانی تکلیف کا باعث نہ بنے۔

عمران خان نے اس بات پر زور دیا کہ اسلاموفوبیا کے خاتمے کے حوالے سے عالمی سطح پر مکالمہ ضروری ہے۔

عاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کابینہ کو کورونا وائرس کی صورت حال سے آگاہ کیا اور کہا کہ کورونا کی دوسری لہر مہلک ثابت ہو رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایک دن میں 89 اموات ہوئی ہیں اور ملک کے تقریباً ہر شہر میں کورونا وبا میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔

اس موقع پر وزیر اعظم نے کہا کہ کورونا وبا پر سیاست نہیں ہونی چاہیے کیونکہ اس سے انسانی جانوں کو خطرہ ہے، ہمارے ملک کے صحت کا نظام وبا کے پھیلاؤ کا متحمل نہیں ہو سکتا۔

وزیراعظم نے ہسپتالوں میں آکسیجن کی فراہمی پر نوٹس لیا اور ہدایات کی کہ ہر ہسپتال میں آکسیجن وافر مقدار میں مہیا کی جائے اور اس ضمن میں تمام ہسپتال طریقہ کار وضع کریں۔

وزیر صنعت حماد اظہر نے کابینہ کو آگاہ کیا کہ آکسیجن استعمال کرنے والی صنعتوں نے اس بات کی یقین دہانی کرائی ہے کہ ایمرجنسی حالات میں صنعتیں ہسپتالوں کو مطلوبہ مقدار میں آکسیجن مہیا کریں گی۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں