پاکستان

وزیراعظم پاکستان: اسرائیل غاصب حکومت ہے/ فلسطینیوں کا قتل عام بند کرو

پاک صحافت پاکستان کے وزیر اعظم نے غزہ کے لوگوں کے لیے فوری طور پر امداد بھیجنے کے لیے انسانی ہمدردی کی راہداری کو دوبارہ کھولنے کا مطالبہ کیا اور کہا: اسرائیل غاصب اور جارح حکومت ہے اور ہم فلسطینیوں کے قتل عام اور دہشت گردی کی مہم کو فوری بند کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

پاکستان کے قومی ٹی وی کی ارنا کی رپورٹ کے مطابق، انوار الحق کاکڑ نے ریاض میں اسلامی تعاون تنظیم کے رکن ممالک کے سربراہان کے آٹھویں ہنگامی اجلاس سے خطاب کے دوران اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ارکان سے خطاب کیا۔ اسرائیلی جرائم کو روکنا اور فوری طور پر جنگ بندی قائم کرنا آپ کی ذمہ داری ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ غزہ کے بے دفاع لوگوں کو انسانی امداد کی ضرورت ہے اور اس کے لیے غزہ سے نظر آنے والی کراسنگ کو دوبارہ کھول دیا جانا چاہیے اور غزہ کے شہریوں تک فوری انسانی امداد بھیجی جانی چاہیے۔

پاکستان کی عبوری حکومت کے وزیراعظم نے کہا کہ ہم فلسطینیوں کے خلاف قابض اسرائیلی حکومت کے جرائم کی شدید مذمت کرتے ہیں اور غزہ میں نسل کشی کو فوری بند کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ فلسطین کا صرف سیاسی حل ہے اور 1967 سے پہلے کی سرحدوں کے مطابق ایک آزاد فلسطینی ریاست قائم کی جانی چاہیے جس کا دارالحکومت قدس شریف ہو۔ 70 سال قبل اقوام متحدہ نے قرارداد پاس کرکے فلسطین کا حل سب کے سامنے پیش کیا۔

پاکستان کے وزیراعظم نے خبردار کیا کہ فلسطینیوں کے خلاف ناانصافیوں اور بے گناہوں کا قتل عام خطے میں دیگر تنازعات کو جنم دینے کا باعث بنے گا۔

انہوں نے کہا: اسرائیلی قابض افواج بین الاقوامی انسانی قوانین اور انسانی حقوق کی صریح خلاف ورزی کر رہی ہیں اور ان کا طاقت کا اندھا دھند اور غیر متناسب استعمال جنگی جرم اور انسانیت کے خلاف جرم ہے۔

انوار الحق نے مزید کہا: غزہ کی موجودہ صورتحال کی بنیادی وجہ صیہونی آباد کاروں کی مستقل استعماریت اور فلسطینی عوام کے حق خود ارادیت سے انکار ہے۔

یہ بھی پڑھیں

خورشید شاہ

اسٹیبلشمنٹ سے مذاکرات کی خواہشمند پارٹی کیساتھ معاملات آگے نہیں بڑھ سکتے، خورشید شاہ

اسلام آباد (پاک صحافت) پیپلز پارٹی کے رہنما سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے