مقبول باقر

سندھ کابینہ کا کچے میں آپریشن کیلئے رینجرز اور آرمی کی خدمات حاصل کرنے کا فیصلہ

کراچی (پاک صحافت) نگراں سندھ کابینہ نے کراچی میں مزید 6 ماہ تک رینجرز کی تعیناتی اور کچے میں پولیس، رینجرز اور فوج کے ساتھ آپریشن کا فیصلہ کیا ہے۔ ترجمان وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق رینجرز تعیناتی 14 ستمبر 2023 سے فروری 2024 تک ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق نگراں وزیراعلیٰ سندھ مقبول باقر کی صدارت میں کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں انہوں نے کچے کے علاقے میں انٹرنیٹ کی سہولت ختم کرنے کا حکم دیا۔ نگراں وزیراعلیٰ سندھ نے آئی جی سندھ کو بھی اسٹریٹ کرائم کے خلاف فیصلہ کُن آپریشن کا حکم دیا۔ امن و امان سے متعلق صوبے بھر کی صورتحال پر سندھ کابینہ کو آئی جی سندھ نے بریفنگ دی۔

واضح رہے کہ بریفنگ میں بتایا گیا کہ 2023ء میں 218 لوگ اغوا ہوئے جن میں سے 207 بازیاب ہوئے ہیں جبکہ 11 لوگ ابھی تک یرغمال ہیں۔ آئی جی سندھ نے کابینہ کو بریفنگ میں مزید بتایا کہ 11 میں سے 3 لوگ شہید بینظیرآباد، 7 لاڑکانہ اور ایک سکھر سے اغوا ہوئے۔ اس موقع پر نگراں وزیراعلیٰ سندھ نے آئی جی کو مغویوں کو فوری بازیاب کرانے کی ہدایت کی۔

یہ بھی پڑھیں

پارلیمنٹ

صدارتی انتخاب کیلئے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 9 مارچ کو طلب

اسلام آباد (پاک صحافت) ملک میں نئے صدر کے انتخاب کے لیے پارلیمنٹ کا مشترکہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے