25.2 C
Pakistan
اتوار, مئی 16, 2021

حکومت موجودہ صورتحال سے نمٹنے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئی ہے۔ بلاول بھٹو

کراچی (پاک صحافت) بلاول بھٹو کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت ملک بھر میں جاری موجودہ صورت حال سے نمٹنے میں ناکام ہوگئی ہے۔ اگر حکومت بروقت اقدام کرتی تو پرتشدد واقعات پیش نہ آتے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے گزشتہ دنوں پرتشدد واقعات میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ تشدد پر اکسانا اور انسانی خون بہانہ کسی بھی صورت ٹھیک نہیں کیونکہ تشدد سے تشدد ہی جنم لیتا ہے۔ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ اس سلیکٹڈ حکومت نے نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کیوں نہیں کیا اور پیدا ہونے والے ان چیلنجز کو پارلیمنٹ میں کیوں زیر بحث نہیں لایا گیا؟

چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو نے ضیاء دور میں ان گروپوں کی سرپرستی کی طرف اشارہ کیا جو نسلی، مذہبی اور فرقہ واریت کی نفرتیں پھیلا کر قومی دھارے کی سیاسی پارٹیوں کو کمزور کرنے کے مقصد کے لئے بنائی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی پارٹیوں کو کمزور کرنے کے لیے یہ آمرانہ ہتھیار ابھی تک بنائے جا رہے ہیں۔ نئے نئے عفریت جنم دیے جا رہے ہیں تاکہ پاکستان کے عوام کی جمہوری خواہشات کو دبایا جا سکے۔

چیئرمین بلاول نے کہا کہ یہ انتہائی افسوسناک بات ہے کہ ہم یہ سمجھنے میں ناکام ہوگئے کہ جو مستقل آگ سے کھیلتا ہے وہ خود بھی جل جاتا ہے۔ بلاول بھٹو نے کہا کہ ہماری جماعت شروع سے تشدد اور انتہاپسندی کے خلاف رہی ہے اور اس انتہا پسندی کے خلاف جنگ میں ہماری قیادت بشمو ل شہید محترمہ بینظیر بھٹو نے قیمت ادا کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب اس بات کو دیکھنا انتہائی تکلیف دہ ہے کہ سلیکٹڈ کو یہ اجازت دی گئی کہ وہ سرکاری املاک پر حملے کریں، اسلام آباد میں سرکاری دفاتر پر قبضہ کریں اور حکومت کو یرغمال بنا لیں۔ آج بھی اسی سلیکٹڈ کے طریقہ کار کو دہرایا جا رہا ہے تاکہ نظام کو تباہ کیا جا سکے۔

پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین نے کہا کہ ہمارا نقطہ نظربہت واضح ہے کہ عوام کے جان و مال کے تحفظ کی ذمہ داری ریاست پر عائد ہوتی ہے اور موجودہ حکومت یہ ذمہ داری پوری کرنے میں بار بار ناکام ہوئی ہے جس کی وجہ سے ملک انارکی کا شکار ہوگیا ہے۔

Related Articles

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

12 + 18 =

Latest Articles