اقوام متحدہ حملہ آور سعودی اتحاد کا حصہ بن گیا ہے : یمنی رہنما

صنعا {پاک صحافت} یمن کے ایک رہنما نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ بھی جارح سعودی اتحاد کے غیر قانونی اقدامات کا حصہ بن چکی ہے۔

یمن کی نیشنل آئل کمپنی کے ترجمان عصام الموتوکیل نے جنگ بندی میں توسیع کے صرف ایک دن بعد پٹرول لے جانے والے سی ہارٹ جہاز کو روکنے پر سخت ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے المسیرہ ٹی وی چینل کی رپورٹ میں کہا کہ اقوام متحدہ بھی سعودی عرب کے غیر قانونی اقدامات کی حمایت کر رہا ہے۔ اتحاد یمن کی تیل کمپنی نے دعویٰ کیا ہے کہ یہ اقدام حملہ آور سعودی اتحاد نے جہاز کی تلاشی اور اقوام متحدہ کے لائسنس کے باوجود کیا ہے۔

بن سلمان
یمنی آئل کمپنی کا کہنا ہے کہ رکے ہوئے جہاز میں 29000 ٹن ایندھن موجود ہے۔ یمن کی تیل کمپنی کے ترجمان عصام الموتوکیل نے کہا کہ حملہ کرنے والے سعودی اتحاد نے دو ماہ کی جنگ بندی کی خلاف ورزی کی۔ الموتوکیل نے سعودی اتحاد سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ روکے گئے جہاز کو فوری طور پر چھوڑ دے۔ قابل غور ہے کہ سعودی اتحاد کی کارروائیوں پر نظر رکھنے والی یمنی کمیٹی کے مطابق گزشتہ دو جنگ بندیوں میں جارح سعودی اتحاد نے 14000 مرتبہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی ہے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں