صہیونی حکام کی جانب سے نسل پرستی کا مظاہرہ، فلسطینی قیدیوں کو کورونا ویکسین نہ لگانے کا اعلان کردیا

صہیونی حکام کی جانب سے نسل پرستی کا مظاہرہ، فلسطینی قیدیوں کو کورونا ویکسین نہ لگانے کا اعلان کردیا

اسرائیلی ذرائع ابلاغ کے مطابق صہیونی حکام نے نسل پرستی کا مظاہرہ کرتے ہوئے جیلوں میں ڈالے گئے فلسطینیوں ‌کو کورونا ویکسین نہ لگانے کا فیصلہ کیا ہے جب کہ جیلوں میں قید یہودیوں کو کورونا ویکسین لگائی جائے گی۔

اسرائیلی ذرائع ابلاغ کے مطابق داخلی سلامتی کے وزیر امیر اوہانا نے کل ہفتے کے روز ہدایات جاری کی ہیں کہ جیلوں میں قید فلسطینیوں کو کورونا ویکسین نہ دی جائے، ان کا کہنا ہے کہ کورونا ویکسین صرف یہودی قیدیوں  کو دی جائے گی۔

اسرائیلی وزیر برائے داخلی سلامتی نے کہا ہے کہ کورونا ویکسین صرف حکومت کی منظوری سے دی جائے گی، حکومت جس کوچاہےگی اسے ویکسین دے گی،ان کا کہنا تھا کہ اسرائیلی جیلوں میں قید فلسطینیوں‌کو کورونا ویکسین نہیں دی جائے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ جب تک قیدیوں کو کرونا ویکسین لگانے کی سرکاری سطح پر منظوری نہیں دی جاتی اس وقت تک جیلوں میں قید فلسطینیوں کو ویکسین نہیں لگائی جائے گی۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز فلسطینی محکمہ امور اسیران کے عہدیدار قدری ابو بکر نے بتایا تھا کہ صہیونی حکام نے انہیں بتایا ہے کہ چند روز کے اندر اندر کورونا ویکسین لگائے جانے کا عمل شروع کیا جائے گا۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں