پاکستان

سابق پاکستانی عہدیدار: مظلوم قومیں محکم قیادت سے محروم ہو گئیں

پاک صحافت انسانی حقوق کے امور میں وزیر اعظم پاکستان کے سابق مشیر نے ایران کے شہید صدر کو اسلام اور دنیا کے انصاف پسندوں کے لیے امید کا سرچشمہ قرار دیا اور کہا: آیت اللہ رئیسی کی شہادت سے مظلوم اقوام اپنے عظیم رہنما کو کھو دیا۔

پاک صحافت کی رپورٹ کے مطابق، محترمہ مشعل یاسین ملک نے ایرانی سفارتخانے میں ہیلی کاپٹر حادثے کے شہداء کی یادگاری کتاب پر دستخط کرنے کے بعد، اسلام آباد میں  پاک صحافت کے رپورٹر کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا: “عقل اور فکری کا اچانک عروج ایران کے علمی صدر جناب سید ابراہیم رئیسی ہم سب کے لیے ناقابل یقین ہیں اور مجھے یہ کہنا چاہیے کہ دنیا آیت اللہ رئیسی جیسے ہیروز کے کھو جانے کا مشاہدہ کر رہی ہے۔

انہوں نے مزید کہا: وہ دنیا بھر میں بالخصوص فلسطین اور کشمیر میں لڑنے والی قوموں اور مظلوم عوام کے ہیرو تھے۔ خطے میں محروم قوموں کے دفاع میں ان کی بصیرت اور جرأت کو ہم کیسے بھول سکتے ہیں۔

اس خاتون سیاست دان نے تاکید کی: ہیلی کاپٹر کے ہولناک حادثے اور ایرانی اہلکاروں کی شہادت نے ہم سب کے دلوں کو زخمی کر دیا ہے اور ہم اس عظیم صدمے پر اسلامی جمہوریہ ایران کی قوم اور حکومت کے ساتھ تعزیت پیش کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا: ایران کے مرحوم صدر عالم اسلام کے عظیم رہنما، مظلوم اقوام اور انصاف کے متلاشی تھے اور ہمیں عالم اسلام کے اتحاد اور دفاع کے لیے اس پیارے سیاستدان کے راستے اور افکار کو جاری رکھنا چاہیے۔

مشعل یاسین نے کہا کہ آیت اللہ رئیسی کے افکار ہم سب کے دل و دماغ میں زندہ رہیں گے کیونکہ وہ آزادی کے متلاشیوں کے لیے امید کا سرچشمہ تھے۔

ظریف
پاکستان میں ایران کے سفیر رضا امیری موغادم کی وزیر اعظم پاکستان کے سابق مشیر سے بات چیت
اس رپورٹ کے مطابق، پاکستان کے وزیر اعظم محمد شہباز شریف چند گھنٹے قبل صدر اسلامی ایران کی شہادت کے بعد ایران کے عوام اور حکام سے ان کی قوم اور حکومت کی تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کرنے کے مقصد سے تہران روانہ ہوئے۔

حکومت پاکستان نے اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر اور ان کے ساتھ آنے والے وفد کی شہادت کے سوگ میں 21 مئی کو یوم قومی سوگ کا اعلان کیا ہے۔ اسلام آباد اور اس ملک کی چار ریاستوں کے مراکز میں پاکستان کا جھنڈا نصف سر پر ہے۔ سندھ اور بلوچستان کی ریاستی حکومتوں نے بھی مرکزی حکومت کے بعد کل کو یوم سوگ کے طور پر منانے کا اعلان کیا ہے۔

کل رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے تہران یونیورسٹی میں شہید صدر اور شہداء کے جسد خاکی پر فاتحہ خوانی کی۔

نماز کے بعد صدر آیت اللہ سید ابراہیم رئیسی، وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان، تبریز کے جمعہ کے نمائندے آیت اللہ سید محمد علی الھاشم، مشرقی آذربائیجان کے گورنر ملک رحمتی، سید مہدی موسوی کے جسد خاکی کو سپرد خاک کیا گیا۔ صدر کی سیکیورٹی، اور فلائٹ ٹیم کے تین ارکان انہیں تہران یونیورسٹی سے آزادی اسکوائر کی طرف لوگوں کے ہاتھوں سپرد خاک کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں

کامران ٹیسوری

گورنر سندھ کا 300 یونٹ بجلی استعمال کرنے والوں کو سولر دینے کا اعلان

کراچی (پاک صحافت) گورنر سندھ کامران ٹیسوری کا کہنا ہے کہ 300 یونٹ تک بجلی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے