نصر اللہ

حسن نصراللہ کے بیان سے اسرائیل میں خوف و ہراس پھیل گیا، ہم پوری طرح تیار ہیں!

پاک صحافت حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل نے اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ سے ملاقات میں واضح طور پر کہا کہ ہم پوری طرح تیار ہیں اور تمام آپشن میز پر ہیں۔

اسلامی جمہوریہ کے وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے اپنے دورہ لبنان کے دوران حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل سید حسن نصر اللہ سے ملاقات کی اور خطے کی حالیہ پیش رفت پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ ایرانی وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات میں حزب اللہ کے سکریٹری جنرل نے بیت المقدس سمیت غزہ میں صیہونی حکومت کے وحشیانہ حملوں اور مغربی کنارے میں الاقصی طوفان نامی فوجی آپریشن کے بعد کیے جانے والے وحشیانہ حملوں پر تنقید کی۔ اسلامی مزاحمتی تحریک حماس نے دہشت گرد اسرائیل کی طرف سے ڈھائے جانے والے مظالم کے جواب میں۔اور پیدا ہونے والے انسانی بحران کے بارے میں گہرائی سے بات چیت کی۔ اس ملاقات میں دہشت گرد اسرائیل کی جانب سے شہریوں پر کیے جانے والے حملوں کو روکنے اور ان کا مقابلہ کرنے کے لیے مزاحمتی قوتوں کی تیاری کے حوالے سے بھی لائحہ عمل تیار کیا گیا۔

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ اور حزب اللہ کے سکریٹری جنرل کے درمیان ہونے والی ملاقات میں امریکہ اور بعض یورپی ممالک کی طرف سے دی جانے والی یکطرفہ حمایت کی مذمت کی گئی اور ساتھ ہی ساتھ حزب اللہ کی طرف سے کی جارہی نسل کشی کو فوری طور پر بند کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔ معصوم فلسطینی عوام کے خلاف غاصب صیہونی حکومت نے انصاف پسند حکومتوں اور دنیا بھر کے اسلامی ممالک سے آگے آنے کی اپیل کی۔ اس ملاقات میں حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل سید حسن نصر اللہ نے ایرانی وزیر خارجہ سے کہا کہ امریکہ اور بعض یورپی ممالک جس طرح کھل کر اسرائیل کے گھناؤنے جرائم کی حمایت کر رہے ہیں اور وہ فلسطینی عوام کا قتل عام کر رہا ہے، اس کو روکنے اور اسے روکنے کی ضرورت ہے۔ مقابلے کی تیاریاں مکمل ہیں اور تمام آپشنز میز پر ہیں۔ حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل کے اس بیان کے بعد تل ابیب میں خوف و ہراس پایا جاتا ہے۔ خیال کیا جا رہا ہے کہ جلد ہی حزب اللہ اسرائیل کی دہشت گردی کو روکنے کے لیے میدان جنگ میں اترے گی۔

یہ بھی پڑھیں

گیلنٹ

گیلنٹ: اسرائیل نے گزشتہ 75 سالوں میں ایسی جنگ نہیں دیکھی

پاک صحافت صیہونی حکومت کے وزیر جنگ یوف گیلنٹ نے غزہ کی جنگ میں اسرائیلی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے