انگلینڈ

برطانوی دارالحکومت میں غزہ کے حامی مظاہروں میں تاریخی شرکت کی توقع

پاک صحافت غزہ کے عوام کی حمایت میں آج لندن میں ہونے والے مظاہرے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ یہ ایک تاریخی مظاہرہ ہوگا۔

پاک صحافت کے مطابق لندن میں جنگ مخالف مظاہرے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ اس مظاہرے میں 500,000 سے 10 لاکھ سے زائد افراد کی شرکت متوقع ہے، جو اس ہفتے کے روز برطانوی دارالحکومت کے مرکز میں ہونے والا ہے۔

کچھ دوسرے لوگوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس مظاہرے میں دس لاکھ سے زیادہ لوگ شریک ہو سکتے ہیں۔

انڈیپینڈنٹ کی رپورٹ کے مطابق ’سٹاپ دی وار کولیشن‘ نامی اس مظاہرے کے منتظمین میں سے ایک کا کہنا ہے کہ یہ مظاہرہ واقعی تاریخی ہوگا۔

اسٹاپ دی وار کولیشن نے یہ بھی کہا کہ ملک بھر میں بس کمپنیاں یہ اطلاع دے رہی ہیں کہ ان کی تمام گاڑیاں پوری طرح بک ہوچکی ہیں، کچھ علاقوں میں انتظار کی فہرستیں ہیں۔

فلسطین یکجہتی مہم کے ڈائریکٹر “بن جمال”، جو اس احتجاجی ریلی کے مرکزی منتظمین میں سے ایک ہیں، نے کہا کہ ان کا تاثر یہ ہے کہ پورے انگلینڈ سے لوگ اس مظاہرے میں شرکت کے لیے لندن جائیں گے۔

یہ مظاہرہ “پارک لین” سے اس مشرق کے جنوب مغرب میں لندن میں امریکن ایمبیسی کی طرف ہونے جا رہا ہے۔

برٹش لیبر پارٹی کے سابق رہنما جیریمی کوربن ریلی سے خطاب کرنے والے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

دھماکا

مشرق وسطیٰ میں امریکہ کی ناکام پالیسی اور نیتن یاہو کی واشنگٹن کی سرخ لکیروں سے بے حسی

پاک صحافت نیویارک ٹائمز نے ایک مضمون میں امریکہ کی مشرق وسطیٰ پالیسی کی ناکامی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے