ظالم

ناروے نے نیتن یاہو کی گرفتاری کا اعلان کر دیا

پاک صحافت ناروے کے وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ صیہونی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو اگر ان کے ملک کا دورہ کریں گے تو انہیں گرفتار کر لیا جائے گا۔

ناروے کے وزیر خارجہ ایسپن بارتھ ایڈے نے کہا کہ بین الاقوامی عدالت کے حکم کے مطابق اگر نیتن یاہو اپنے ملک کا دورہ کریں گے تو انہیں گرفتار کر لیا جائے گا۔

اس سے قبل اسرائیل کے ٹی وی چینل 12 نے اپنی رپورٹ میں کہا تھا کہ اگر ہیگ کی بین الاقوامی عدالت کے تین جج اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو اور وزیر دفاع یواف گالانٹ کی گرفتاری کے وارنٹ جاری کرتے ہیں تو اس کے بعد سے دونوں کو گرفتار نہیں کیا جا سکے گا۔ ایسا کوئی بھی ملک جس نے روم معاہدے پر دستخط کیے ہیں وہ سفر نہیں کر سکیں گے۔

اس رپورٹ کے مطابق اس حکم نامے کے اجراء کے بعد نیتن یاہو اور گیلنٹ جرمنی، ہالینڈ، یونان، فرانس، جاپان اور اسپین جیسے ممالک کا سفر نہیں کر سکیں گے۔ اس فہرست میں دنیا بھر کے 124 ممالک ایسے ہیں، جنہوں نے روم معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔

اسرائیلی ٹی وی چینل نے کہا کہ چونکہ امریکہ اس فہرست میں شامل نہیں ہے، اس لیے صیہونی رہنما آزادانہ طور پر واشنگٹن کا سفر کر سکیں گے۔

قابل ذکر ہے کہ گیلنٹ کی بین الاقوامی فوجداری عدالت یا آئی سی سی نے نیتن یاہو اور گیلنٹ کے وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ اس کے علاوہ آئی سی سی دوسری فہرست بھی جاری کر سکتی ہے، جس میں دیگر صہیونی رہنماؤں کی گرفتاری کا بھی مطالبہ کیا جا سکتا ہے، جو غزہ جنگ میں فلسطینیوں کے قتل عام میں ملوث ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

اطالوی وزیراعظم

اسرائیل حماس کے جال میں پھنس رہا ہے۔ اطالوی وزیراعظم

(پاک صحافت) اطالوی وزیراعظم جارجیا میلونی نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ اسرائیل حماس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے