شازیہ مری

الیکشن ایکٹ میں ترامیم آئندہ انتخابات میں دھاندھلی کا ایک نیا منصوبہ ہے، شازیہ مری

اسلام آباد (پاک صحافت) پاکستان مسلم لیگ ن کی مرکزی رہنما شازیہ مری نے الیکشن ایکٹ میں ترامیم کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کو اپنی نااہلی اور ناکامی واضح طور پر نظر آ رہی ہے اس لئے اب ذاتی مفادات کے لئے قانون ہی تبدیل کیا جا رہا ہے۔ شازیہ مری نے کہا کہ الیکشن ایکٹ میں ترامیم آئندہ انتخابات میں دھاندھلی کا ایک نیا  منصوبہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کی مرکزی ترجمان شازیہ مری نے جاری بیان میں کہا کہ  الیکشن ایکٹ اور پیکا قانون میں ترامیم لاکر عوام کو خاموش کرانے کی حکومتی سازش کی بھرپور مخالفت کرتے ہیں، ان کا کہنا تھا کہ حکومت کو غیر قانونی اقدامات کے ذریعے انتخابات چوری کرنے نہیں دیں گے۔ شازیہ مری نے یہ بھی کہاکہ عوام کو نا گھبرانے کا مشورہ دینے والی حکومت اب خود کیوں گھبرا رہی ہے؟

واضح رہے  کہ پی پی رہنما شازیہ مری نے جاری بیان میں مزید کہا کہ  پیکا قانون کے تحت عام لوگوں کی آواز کو دبانا غیر جمہوری عمل اور عام شہری کے حقوق کی خلاف ورزی ہے، حکومت عام شہری کی آواز دبانے کے لئے ایسے اقدامات کر رہی ہے جو آمریت میں بھی نہیں ہوا۔وفاقی حکومت ڈکٹیشن کے تحت ایسی قانون سازی نہ کرے جس کا کل وہ خود شکار بنیں۔

یہ بھی پڑھیں

پارلیمنٹ

صدارتی انتخاب کیلئے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 9 مارچ کو طلب

اسلام آباد (پاک صحافت) ملک میں نئے صدر کے انتخاب کے لیے پارلیمنٹ کا مشترکہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے