سوڈان

سوڈان میں متحارب فریقوں کے درمیان نیا معاہدہ طے پا گیا

پاک صحافت سعودی عرب میں سوڈانی فوج اور آر ایس ایف یعنی پیرا ملٹری ریپڈ فورس کے درمیان معاہدہ طے پا گیا ہے۔

ارنا کی رپورٹ کے مطابق متحارب فریقوں کے درمیان ایک معاہدہ ہوا ہے کہ ان کی نظر میں سوڈان کے عوام کے مفادات سب سے مقدم ہیں۔

دونوں جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ شہریوں کو نقصان سے محفوظ رکھنے کے لیے ہر قسم کی احتیاطی تدابیر اختیار کی جائیں اور تنازع میں پھنسے لوگوں کو دوسری جگہوں پر جانے کا موقع فراہم کیا جائے۔ اس کے ساتھ ہی دونوں فریقوں نے اتفاق کیا ہے کہ وہ عام لوگوں کو طبی خدمات فراہم کرنے والوں سے دور رہیں گے۔

سعودی عرب کے شہر جدہ میں ہونے والے اس معاہدے میں کہا گیا ہے کہ دونوں فریق جنگ کے دوران بچوں کو ڈھال کے طور پر استعمال نہیں کریں گے اور نہ ہی انہیں اسلحہ دے کر لڑائی کے لیے بھیجا جائے گا۔ اس سے قبل سوڈانی فوج نے اعلان کیا تھا کہ ایک وفد ملک میں جنگ بندی کے مقصد سے سعودی عرب کے دورے پر ہے۔

قابل ذکر ہے کہ 15 اپریل سے سوڈانی فوج اور نیم فوجی ریپڈ فورس کے درمیان شدید جھڑپیں شروع ہو گئی تھیں۔ ان جھڑپوں کی وجہ سے سوڈان میں بہت سنگین انسانی بحران پیدا ہو گیا تھا۔ اس تنازعے کے دوران کم از کم 550 افراد مارے گئے جبکہ تقریباً پانچ ہزار افراد زخمی ہوئے۔

اس بحران سے نکلنے کے لیے فریقین نے اپنے اپنے نمائندے سعودی عرب کے شہر جدہ بھیجے تھے۔ دونوں فریق ایک دوسرے پر جھڑپ شروع کرنے کا الزام لگا رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

اسرائیل

غزہ میں مزاحمتی کمانڈروں کے قتل کی جھوٹی خبریں شائع کرنے سے “اسرائیل” کا کیا مقصد ہے؟

پاک صحافت ایک رپورٹ میں عرب دنیا کے معروف تجزیہ نگار عبدالباری عطوان نے غزہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے