لبنان کے پارلیمانی انتخابات میں عوام نے بھرپور حصہ لیا، حزب اللہ نے اہم اشارہ کر دیا

لبنان انتخابات

بیروت {پاک صحافت} لبنان کے وزیر داخلہ نے اعلان کیا ہے کہ ملک کے پارلیمانی انتخابات میں عوام کی شرکت تقریباً 41 فیصد رہی ہے جب کہ حزب اللہ نے کہا ہے کہ وہ انتخابات کے نتائج کو قبول کرے گی اور سب کی طرف تعاون کا ہاتھ بڑھائے گی۔

اتوار کو پارلیمانی انتخابات کے لیے پولنگ ہوئی جس میں 128 پارلیمانی نشستوں کے لیے 718 امیدوار میدان میں تھے۔ لبنان کے وزیر داخلہ بسام مولوی نے اتوار کی رات اعلان کیا کہ تقریباً 41 فیصد عوام نے انتخابات میں حصہ لیا۔

قبل ازیں وزیراعظم نجیب مکاتی نے ووٹنگ کا عمل ختم ہونے کے بعد کہا تھا کہ بعض حلقوں میں عوام کی شرکت 50 فیصد سے زیادہ رہی ہے۔

سابق وزیر خارجہ اور آزاد نیشنل موومنٹ کے سربراہ جبران باسل، جنہیں حزب اللہ کا ایک جزو سمجھا جاتا ہے، نے ووٹنگ ختم ہونے کے بعد کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ ان انتخابات میں ہماری جماعت کو نمایاں برتری حاصل ہوئی ہے۔

دوسری جانب حزب اللہ کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل شیخ نعیم قاسم نے اتوار کو ووٹ ڈالنے کے بعد کہا کہ عوام کو پوری آزادی اور اختیار کے ساتھ ووٹ ڈالنا چاہیے کیونکہ انتخابات کے بعد کسی کو یہ کہنے کا حق نہیں ہو گا کہ وہ پارلیمنٹ میں نمائندگی نہیں کر رہا۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کا نتیجہ جو بھی آئے اسے قبول کریں گے اور سب کے ساتھ تعاون کا ہاتھ بڑھائیں گے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں