موساد کا خطرناک جاسوس لبنان میں گرفتار

لبنان

پاک صحافت اسرائیل کی خوفناک خفیہ ایجنسی موساد کے ایک جاسوس کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

اس اسرائیلی جاسوس کی شناخت کے حوالے سے لبنانی روزنامہ الاخبار نے خبر دی ہے کہ "حسن” نے 15000 ڈالر کے عوض اپنے ساتھیوں کی معلومات موساد کو فراہم کی تھیں۔ اس رپورٹ کے مطابق اس جاسوس نے صیہونی حکومت کے جاسوسی نیٹ ورک کے خلاف مزاحمت کے حوالے سے بھی معلومات فراہم کیں۔

الاخبار کے مطابق اس لبنانی جاسوس سے موساد نے 2020 میں واٹس ایپ کے ذریعے رابطہ کیا تھا لیکن اسے لبنانی سیکیورٹی فورسز نے جولائی 2022 میں گرفتار کر لیا تھا۔

لبنان کے سیکورٹی ذرائع نے تقریباً دو ماہ قبل بتایا تھا کہ لبنان کی اقتصادی صورت حال خراب ہونے کے بعد سے گزشتہ تین سالوں میں اسرائیل کے لیے جاسوسی کے الزام میں 185 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔

آگاہ رہیں کہ غاصب صیہونی حکومت نے اپنے جاسوسی نیٹ ورک کو پوری دنیا میں پھیلا رکھا ہے اور اس طرح وہ اپنے مذموم عزائم کی تکمیل کے لیے کوشاں ہے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں