آیت اللہ خامنہ ای

دشمن کے تمام منصوبے خاک میں مل گئے : رہبر انقلاب اسلامی

پاک صحافت رہبر انقلاب اسلامی نے فرمایا ہے کہ ایران کے حوالے سے دشمن کے جامع منصوبے ناکام ہو گئے ہیں۔

آیت اللہ ہلال العظمی سید علی خامنہ ای نے جمعرات کے روز تہران میں حضرت فاطمہ زہرا سلام اللہ علیہا کے یوم ولادت کی مناسبت سے اہلبیت شعراء اور خطیبوں یا مقررین سے ملاقات کی۔

انہوں نے کہا کہ حضرت فاطمہ زہرا سے والہانہ محبت اور عقیدت ذاتی اور سماجی میدان میں بہت موثر ہے۔ آپ نے فرمایا کہ پیغمبر اسلام (ص) اور ان کے صالح رشتہ داروں کی “مداح” یا تعریف و تعظیم شیعوں کی میراث ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک ایسا فن ہے جو اچھی آواز، اچھی شاعری، پڑھنے کے مناسب انداز اور اچھی تحریر سے بنتا ہے۔

اس ملاقات میں سینئر رہنما نے کہا کہ ملک کے خلاف دشمنوں کی بڑی سازشیں ناکام ہوئیں کیونکہ ان کا حساب غلط تھا۔ انہوں نے کہا کہ دشمن نے ملک میں انتشار اور بدامنی پھیلانے کے تمام حربے اپنائے ہوئے ہیں۔ سینئر رہنما نے کہا کہ اس کے لیے دشمن نے جاسوسوں کی ٹیمیں، ایرانو فوبیا کا شور، نسلی، مذہبی، سیاسی اور ذاتی جذبات کو ابھارنے اور اس کے لیے وسیع پیمانے پر پروپیگنڈا جیسے حربے استعمال کرنا شروع کر دیے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایک جائزہ نگار کے طور پر میں شترو کو ان کی اچھی منصوبہ بندی کے لیے تہہ دل سے مبارکباد پیش کرتا ہوں کیونکہ انہوں نے بہت حساب سے چیزوں کو اپنی جگہ پر رکھا لیکن اس سب کے باوجود وہ ان کی خواہش کو پورا کرنے میں ناکام رہے کیونکہ ان کی تمام مساواتیں غلط ثابت ہوئیں۔

رہبر معظم نے مزید فرمایا کہ وہ سوچ رہے تھے کہ اقتصادی مسائل کی وجہ سے ایرانی قوم ان کے تخریبی اقدامات میں ان کا ساتھ دے گی۔ انہوں نے کہا کہ وہ یہ بھی سمجھ رہے ہیں کہ فحاشی، بدتمیزی اور بد زبانی کا استعمال کرکے وہ ملک کے عہدیداروں کو غیر فعال کر کے میدان سے باہر کر دیں گے۔ اس کا یہ بھی خیال تھا کہ بہت شور مچا کر وہ ملک کے اعلیٰ افسران میں نظریاتی اختلاف پیدا کر دے گا۔ وہ یہ بھی سوچ رہے تھے کہ امریکہ کے غلام ملک کے پیٹرو ڈالر اسلامی جمہوریہ ایران کی مرضی کو متاثر کریں گے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے فرمایا کہ گزشتہ چالیس سالوں سے اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف ہر طرح کے حربے استعمال کیے جارہے ہیں۔ اس کے باوجود، انہوں نے کہا، وہ ہارتے ہیں کیونکہ ان کی مساوات ہمیشہ غلط ہوتی ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ وہ اب تک شکست کا منہ دیکھ چکے ہیں اور آئندہ بھی دیکھتے رہیں گے۔

سینئر رہنما نے مشورہ دیا کہ دشمن کی غلط مساوات ہماری لاپرواہی کی وجہ نہ بنیں۔ ہمیں اس بارے میں محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔ ایسا نہ ہو کہ ہم مطمعن ہو جائیں اور یہ سمجھیں کہ معاملہ ختم ہو گیا ہے۔ رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے فرمایا کہ ہمیں میدان میں ڈٹے رہنا چاہیے۔ ہمیں سمجھنا چاہیے کہ قوم کی سلامتی کا بنیادی عنصر قومی اتحاد ہے۔

یہ بھی پڑھیں

بچہ

صیہونیوں کے ہاتھوں دو سالہ فلسطینی بچے کی شہادت

پاک صحافت صیہونی حکومت نے اپنے تازہ جرائم میں دو سالہ فلسطینی بچے کو شہید …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے