اب صیہونی حکومت کو میزائل سے دیں گے اپنا پیغام: حماس

ریلی

یروشلم {پاک صحافت} فلسطین کی اسلامی مزاحمتی تحریک حماس کے رہنما کا کہنا ہے کہ اگر ناجائز صیہونی حکومت نے مسجد الاقصی کی بے حرمتی بند نہ کی تو ہم اپنا پیغام میزائلوں کے ذریعے پہنچائیں گے۔

مشیر المصری کے مطابق اگر صیہونی حکومت نے مسجد الاقصی کی بے حرمتی جاری رکھی اور فلیگ ریلی کو نہیں روکا تو ہمارا پیغام اس حکومت کو دوسرے طریقے سے بھیجا جائے گا۔

صیہونی حکومت کی جانب سے بیت المقدس کے قدیم علاقے پر ناجائز قبضے کی برسی کے موقع پر ہر سال 10 مئی کو ایک ریلی نکالی جاتی ہے۔ صیہونیوں کا خیال ہے کہ پورا بیت المقدس صیہونی حکومت کا دارالحکومت ہے جبکہ فلسطینیوں کا خیال ہے کہ یہ فلسطین کا دارالحکومت ہے۔

حماس کے رہنما کا کہنا ہے کہ 10 مئی کو نکالی جانے والی ریلی کسی بھی صورت میں قابل قبول نہیں۔ اس نے ان سے کہا کہ وہ اپنے منصوبے کو عملی جامہ پہنانے سے باز رہیں کیونکہ مزاحمت پوری طرح سے تیار تھی اور صرف ایک اشارے کا انتظار کر رہی تھی۔

حماس کے اس رہنما کے مطابق صیہونی حکومت کے حکام کو اپنے سیاسی مستقبل کو خراب کرنے سے پہلے آئندہ ریلی کے انعقاد پر نظر ثانی کرنی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ بہتر ہے کہ مزاحمت کا دوبارہ امتحان نہ لیا جائے۔

قابل ذکر ہے کہ فلسطینی دھڑوں نے ایک بیان جاری کیا ہے جس میں تمام فلسطینیوں سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ آئندہ جمعہ کو مسجد الاقصی کے صحن میں جمع ہوں تاکہ صیہونیوں کے کسی بھی قسم کے تصادم کا مقابلہ کریں۔ فلسطین کے مزاحمتی گروپوں نے خبردار کیا ہے کہ صیہونیوں کی ممکنہ ریلی بارود کے ڈھیر کی مانند ہے جو پورے خطے کو آگ لگا دے گی۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں