جنین میں صیہونی ملیشیا اور فلسطینیوں کے درمیان شدید جھڑپیں

چھڑپ

پاک صحافت الجزیرہ کے نامہ نگار شیرین ابو عاقلہ کے جنین میں قتل نے خاص طور پر ابو عاقلہ کی موت کے مقام پر فلسطینیوں اور اسرائیلی فوجیوں کے درمیان جھڑپوں میں شدت پیدا کر دی ہے۔

جمعہ کو پاک صحافت کے مطابق مظاہروں اور جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے جب کہ صہیونی فوجیں جنین کیمپ کے مغربی دروازے پر تعینات ہیں جہاں الجزیرہ کی صحافی شیرین ابو عاقلہ کو قتل کیا گیا تھا۔

الجزیرہ نے اطلاع دی ہے کہ جھڑپوں کے دوران ایک فلسطینی قیدی داؤد الزبیدی کو اسرائیلی سنائپر نے گولی مار کر زخمی کر دیا۔

ادھر مقامی فلسطینی ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ جنین پر اسرائیلی فوجی حملے کے دوران جنین کیمپ میں الہدف کے علاقے سے ایک دھماکے کی آواز سنی گئی۔

صہیونی عسکریت پسندوں نے بدھ کی صبح شیرین ابو عاقلہ کو مغربی کنارے میں جنین پناہ گزین کیمپ کے قریب صہیونی فلسطینی جھڑپ کی کوریج کے دوران قتل کر دیا، جس سے بین الاقوامی سطح پر مذمت کی لہر دوڑ گئی۔

صہیونی عسکریت پسندوں کے ہاتھوں گولی مار کر ہلاک ہونے والے الجزیرہ ٹی وی کے رپورٹر کی لاش کو جمعرات کے روز مغربی کنارے میں فلسطینی عوام اور اہلکاروں کی ایک بڑی تعداد کی موجودگی میں سپرد خاک کر دیا گیا۔

ابو عاقلہ کی نماز جنازہ آج جمعہ کو فلسطینی عوام کی موجودگی میں ادا کی جائے گی اور اس لیے صیہونی حکومت کی فوجیں تیار ہیں۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں