فرانسیسی پارلیمنٹ نے ایران میں فسادیوں کی حمایت میں قرارداد منظور کر لی

روس

پاک صحافت فرانسیسی پارلیمنٹ نے پیر کو ایک قرارداد منظور کی جس میں ایران میں فسادیوں اور شرپسندوں کی حمایت کا اعلان کیا گیا۔

فرانسیسی قانون سازوں نے ایک غیر پابند قرارداد منظور کی ہے جس میں فسادیوں کے خلاف ایران کے کریک ڈاؤن کا اعادہ کیا گیا ہے اور اس اقدام کی مذمت کی گئی ہے۔ قرارداد میں یورپی ممالک سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ تہران پر کرد لڑکی مہسا امینی کی پولیس حراست میں ہلاکت کی تحقیقات کے لیے دباؤ ڈالیں۔

فرانسیسی قانون سازوں نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ مہسا امینی کی ہلاکت کے بعد ایران میں پھوٹنے والے فسادات کو روکنے کے لیے ایرانی حکومت کا طاقت کا استعمال آزادی اظہار اور مظاہرے کی آزادی کی صریح خلاف ورزی ہے۔

قابل ذکر ہے کہ ایران میں تشدد اور فسادات کے بہانے مغربی ممالک کی سازش ناکام ہونے کے بعد اب ان ممالک نے تہران پر دباؤ ڈالنے کے لیے یہ نیا حربہ اپنایا ہے۔

امریکہ کی قیادت میں مغربی ممالک ایران کے خلاف پابندیاں سخت کرنے کے لیے بیانات اور قراردادیں پاس کر رہے ہیں۔

مغربی ممالک فسادیوں کی حمایت کے بہانے ایران میں امن و سلامتی کی صورتحال کو خراب کرنا چاہتے ہیں تاکہ وہ پابندیاں لگا کر وہ مقاصد حاصل کر سکیں جو وہ حاصل نہیں کر سکے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں