بائیکاٹ

اسرائیل کے خلاف دنیا کا غصہ، تائیوان کو نئے امریکی ہتھیار/ عالمی واقعات پر ایک نظر

پاک صحافت دنیا بھر میں ہزاروں لوگ، برلن سے بغداد تک، رفح میں اسرائیلی فوج کے وحشیانہ جرائم اور فلسطینی پناہ گزینوں کے قتل کی مذمت کے لیے سڑکوں پر نکل آئے۔

اسرائیل کے خلاف دنیا کا غصہ، جرمن فوج کا فوجیوں کی بھرتی کے لیے ٹک ٹاک کا استعمال، امریکہ کا تائیوان کو نئے ہتھیار بھیجنے کا منصوبہ، چین کا جنوبی کوریا اور جاپان کے ساتھ معاہدہ کرنے کا اقدام اور لیبیا میں اسرائیل کے بائیکاٹ کی مہم عروج پر ہے۔ ، حالیہ چند گھنٹوں میں دنیا سے منتخب خبریں ہیں۔

چین جنوبی کوریا اور جاپان کے ساتھ تعلقات قائم کرنے کی طرف

پیر کو چینی وزیر اعظم لی کی چیانگ نے چین، جنوبی کوریا اور جاپان کے درمیان نویں “سہ فریقی سربراہی اجلاس” کے افتتاحی موقع پر کہا کہ بیجنگ جنوبی کوریا اور جاپان کے ساتھ جامع سہ فریقی تعاون کو دوبارہ شروع کرنے کے لیے تیار ہے۔

یوکرین کے برعکس ہم تائیوان کو نئے ہتھیار دیں گے: امریکہ

امریکی ایوان نمائندگان کی خارجہ تعلقات کمیٹی کے چیئرمین مائیکل میک کال نے تائیوان کے صدر لائی چنگ ٹی سے ملاقات میں کہا کہ واشنگٹن تائیوان کو ترقی یافتہ اور جدید ہتھیار فراہم کرنے کا ارادہ رکھتا ہے اور وہ پرانے ہتھیار یوکرین جیسے جزیرے کے حوالے نہیں کرے گا۔ چین کے مطابق آبنائے تائیوان میں کشیدگی بڑھانے کی بڑی وجہ امریکہ ہے۔

جرمن فوج فوجیوں کو بھرتی کرنے کے لیے ٹک ٹاک کا استعمال کرتی ہے

جرمن فوج فوجیوں کی بھرتی کے لیے ویڈیو پلیٹ فارم ٹک ٹاک کو استعمال کرنے کا ارادہ رکھتی ہے، جو نوجوانوں میں بہت مقبول ہے۔ جرمن فوج کے ترجمان کے مطابق، یہ اقدام اس ماہ کے آخر میں شروع ہو جائے گا جس میں نئے پروگرام پر مبنی نقطہ نظر کے بعد پورے جرمنی میں بڑے پیمانے پر بھرتی کی جائے گی۔

نیٹو کے ایٹمی حملے کی کوشش پر روس کی قیاس آرائیاں

اسنا کے مطابق روسی فیڈرل بارڈر سیکیورٹی سروس کے سربراہ ولادیمیر کلیچیوف کا کہنا ہے کہ نیٹو روس پر حملے کے لیے ملکی سرحدوں کے قریب جوہری مشقیں اور مشقیں کر رہا ہے۔

اسرائیل کے خلاف عالمی غم و غصہ

مہر خبررساں ایجنسی کے مطابق دنیا بھر میں لوگوں نے بلاواسطہ ملاقاتیں کیں اور رفح میں اسرائیلی جرائم کی مذمت اور غزہ جنگ اور صیہونی حکومت کے جرائم کے خاتمے کا مطالبہ کرتے ہوئے ذاتی مارچ اور ریلیاں نکالیں۔ یہ مظاہرے استنبول، مانچسٹر، بغداد اور برلن سمیت مختلف شہروں میں ہوئے۔

* اپنے تازہ ترین جرائم میں، صیہونی حکومت نے اتوار کی رات غزہ کی پٹی کے جنوب میں رفح کے شمال مغرب میں پناہ گزین کیمپوں اور بستیوں پر بمباری کی۔ اس وحشیانہ حملے میں کم از کم 50 فلسطینی شہید ہوئے۔

رفح پر اسرائیل کے حملے پر گوتریس کا ردعمل

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس نے رفح شہر پر اسرائیل کے وحشیانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ غزہ میں کوئی محفوظ جگہ نہیں ہے۔

لیبیا میں اسرائیل کے بائیکاٹ کی مہم تیز ہو گئی ہے

تسنیم نیوز کے مطابق، لیبیا میں صیہونی حکومت کی حمایت کرنے والے ممالک کی اشیا، مصنوعات اور خدمات کے بائیکاٹ کی مقبول مہم میں تیزی آگئی ہے۔

لیبیا کے شہریوں نے حالیہ دنوں میں صیہونیت مخالف مظاہرے کیے، صیہونی حکومت کی حمایت کرنے والے ممالک کی اشیا اور مصنوعات کا بائیکاٹ کیا اور فلسطینیوں کی نسل کشی بند کرنے کا مطالبہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں

نظر سنجی

ایک سروے کے نتائج کے مطابق: اس ملک میں بدامنی کے بارے میں امریکی عوام کی تشویش میں اضافہ ہوا ہے

پاک صحافت اپسوس کے سروے کے نتائج کے مطابق امریکہ کے سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے